جمعرات, مارچ 23, 2023
الرئيسيةتازہ ترینپولیس کو پروفیسر جمیل کی درخواست کے ساتھ جو ثبوت ملے ہیں...

پولیس کو پروفیسر جمیل کی درخواست کے ساتھ جو ثبوت ملے ہیں ان کے تحت ڈپٹی کمشنر ہٹیاں بالا کے خلاف مقدمہ کا انداج نہیں بنتا

ایس پی آفس میں ڈی آئی جی مظفر آباد ڈویژن سردار گلفراز خان نے تحریک کے قائدین سے مذاکرات کرتے ہوئے واضع کیا کہ پروفیسر جمیل حسین معاملہ افہام وتفہیم کا ہے پولیس کو درخواست کے ساتھ جو میڈیکل ثبوت ملے ہیں ان کے تحت مقدمہ کا اندارج نہیں بنتا جبکہ قائدین نے ڈی آئی جی پولیس کے عزائم کو مکمل طور پر مسترد کرتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ جب تک ایف آئی آر درج نہیں ہوتی کوئی مذاکرات نہیں کرتے ہمارا مطالبہ یک نکاتی ہے کہ ایف آئی آر درج کی جائے جس پر ڈی آئی جی نے کہا کہ کمیشن قائم کر کے تحقیقات کراتے ہیں جسکو تحریک کے قائدین نے خوش آئند اقدام قرار دیتے ہوئے کہا کہ کمیشن اوپن ہونا چائیے اور کمیشن کی رپورٹ قانون اور انصاف کے عین مطابق ہونی چائیے لیکن ہم کمیشن پر بھی اعتماد نہیں رکھیں گے ڈپٹی کمشنر کے خلاف جب تک کاروائی نہیں ہوتی احتجاجی تحریک جاری رہے گی وزیر اعظم کو بھی واضع و شگاف دو توک الفاظ میں پیغام دے دیا ہے جو ڈپٹی کمشنر کو ناگذیر قرار دئیے ہوئے ہیں اپنے موقف سے ایک اینچ پیچھے نہیں ہٹیں گے عدالت العالیہ سے بھی حصول انصاف کے لےئے رجوع کریں گے جس کے لےئے ماہرین قانون سے مشاورت مکمل ہو چکی ہے اگر کہیں سے بھی انصاف نہ ملا تو اسلام آباد کی جانب لانگ مارچ کریں گے اور اقوام متحدہ کے سامنے بھی احتجاجی دھرنے دیں گے

مقالات ذات صلة

الأكثر شهرة

احدث التعليقات